اقوال زریں

باتوں سے خوشبو آئے

٭ ہمیشہ اپنی چھوٹی چھوٹی غلطیوں سے بچنے کی کوشش کرو کیونکہ انسان پہاڑوں سے نہیں، پتھروں سے ٹھوکر کھاتا ہے۔

٭ کائنات کی سب سے مہنگی چیز احساس ہے جو دنیا کے ہر انسان میں نہیں ہوتی۔

٭ زیادہ گفتگو سوچ اور فکر کو مردہ کر دیتی ہے ۔

٭ بہترین فیصلے چاہتے ہو تو سب کچھ اللہ تعالیٰ پہ چھوڑ دو۔

٭ ڈگری تو محض تعلیمی اخراجات کی رسید ہوتی ہے ، علم تو انسان کی گفتگو اور عمل سے ظاہر ہوتا ہے۔

٭ سب سے اچھی زندگی وہ بسر کرتے ہیں جو اپنی ضرورت پوری کرنے کے لئے اللہ تعالیٰ کے سوا کسی اور پر بھروسہ نہیں کرتے۔

رابعہ نذیر، جماعت ہشتم، گورنمنٹ گرلز ایلیمنڑی سکول بخاری شریف ،راجن پور

واہ کیا بات ہے

٭ مومن وہ نہیں جس کی محفل پاک ہوبلکہ مومن وہ ہے جس کی تنہائی بھی پاک ہو۔

٭ جسمانی امراض پرہیز سے جاتے ہیں اور روحانی امراض پرہیز گاری سے جاتے ہیں۔

٭ با ادب با نصیب، بے ادب بے نصیب۔

٭ آپ کا اخلاق آپ کے خون اور نسب کی پہچان ہے۔

٭ اگر آپ کو اپنے سے کمزور پر زیادہ غصہ آتا ہے تو آپ کو بلڈ پریشرکی بجائے منافقت کی بیماری ہے۔

٭ دولت کا بہترین مصرف یہ ہے کہ اس سے عزت اور آبرو کوتحفظ مل سکے۔

٭ برے دوست سے تنہائی بہتر ہے۔

محمد سمیع اللہ، جماعت ہشتم، گورنمنٹ ہائی سکول وارڈ نمبر 3، چوک اعظم، ضلع لیہ

ماں کا  رتبہ

٭ ماں ایک ایسا ہیرا ہے جو خرید نے سے نہیں ملتا۔

٭ ماں کا غصہ وقتی ہوتا ہے جو فوری طور پر ضائع ہو جا تا ہے۔

٭ ماں کی طرف پیار سے دیکھنا بھی عبادت ہے۔

٭ ماں ایک ایسی ہستی ہے جو ایک بار کھونے سے دوبارہ نہیں ملتی۔

٭ ماں کی عزت کرنے سے اللہ پاک راضی ہوتا ہے۔

٭ ماں کے قدموں کے نیچے جنت ہے۔

فروا بی بی، گورنمنٹ گرلز مڈل سکول وارڈ نمبر 16 کبیروالا، ضلع خانیوال

لفظ لفظ خوشبو

٭ اگر تو دنیا کی نعمتوں سے فا ئدہ اٹھا نا چاہتا ہے تو لوگوں پر احسان کر جیسے اللہ نے تجھ پر احسان فرمایا۔   

٭ اگر آدمیوں کی کو شش بے فائدہ ہے۔ ایک وہ جس نے مال کمایا مگر کھایا نہیں، دوسرا وہ جس نے علم پڑھا مگر عمل نہ کیا۔

٭ بے  عمل عالم ایسا ہے جیسے اندھے کے ہاتھ میں مشعل ، لوگ تو اس سے فائدہ اٹھائیں ،مگر وہ خود کچھ فائدہ حاصل نہ کر سکے۔

٭دشمن کے ساتھ بے موقع نرمی کرنا اسے شیر بنانا ہے۔

معظمہ فاطمہ، جماعت ہشتم ، گورنمنٹ گرلز ہائی سکول محراب والہ، ضلع بہاول پور

مہکتے الفاظ

زندگی کے ہر دن میں کوئی نیکی، کوئی اچھائی  ضرور کرنےکی کوشش کریں، اس  لیے کہ دِن ختم ہو جائے گا مگر وہ نیکی کی روشنی آپ کے اعمال نامے میں اور اچھائی کی روشنی کسی کی زندگی میں ہمیشہ روشنی کا سبب رہے گی۔

سدرہ مرید ، جماعت ششم ، گورنمنٹ گرلز ایلیمنٹری سکول چوکی گبول، ضلع مظفرگڑھ

اقوال زرین

٭ علم وہ شجر ہے جو دل میں اگتا ہے، دماغ میں پھیلتا ہے اور زبان سے پھل دیتا ہے۔

٭ دنیا میں انہی لوگوں کی قدرہوتی ہے جنہوں نے زندگی میں اپنے استاد کی قدرکی ہوتی ہے۔

٭ ہمیشہ سچ بولو، تاکہ قسم کھانےکی ضرورت نہ پڑے۔

٭ جو شخص محنت کرتا ہے اس کے سامنے پہاڑ کنکر ہے اور جو سست اور کاہل ہے اس کے سامنے تو کنکر بھی پہاڑ ہے۔

٭ گناہ سے بچ کر رہو اور نیکی کی طرف بڑھتے جاؤ۔

رابعہ مختیار ، جماعت نہم ، گورنمنٹ گرلز ہائیر سکینڈری سکول چک نمبر 35 ایم، ضلع لودھراں

سنہری باتیں

٭ وقت ہمیشہ ایک جیسا نہیں رہتا۔ پرندہ جب زندہ ہوتا ہے تو چوینٹیوں کو کھاجاتا ہے اورجب مر جاتا ہے تو چیونٹیاں اسے کھا جاتی ہیں۔

٭ انسان جب زندہ ہوتا ہے تو مٹی سے رزق لیتا ہےمگر جب مر جاتا ہے تو وہی مٹی اسے اپنا رزق بنا لیتی ہے۔

٭ اگر آپ چار لوگوں میں بیٹھ کر کسی کی برائی کرتے ہیں تو یقین جانیےآپ کے جاتے ہی وہاں آپ کی بھی برائیاں شروع ہو جائیں گی۔

محمد سمیر، جماعت نہم، گورنمنٹ ہائیر سکینڈری سکول کوٹ مبارک ڈیرہ غازی خان

حرف حرف روشنی

٭ جھوٹ بول کر جیت جانے سے بہتر ہے کہ سچ بول کر ہار جاؤ۔

٭ وقت کی ایک اچھی عادت یہ بھی ہے کہ جیسا بھی ہو گزر جاتا ہے۔

انصر شبیر، جماعت ششم، گورنمنٹ بوائز ایلیمنٹری سکول چک نمبر 547/ ای بی، ضلع وہاڑی
شیئر کریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •