رنگا رنگ

رسول اکرم ﷺ نے  فرمایا

حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ تعالی سے روایت ہے کہ نبی کریم  ﷺ نے فرمایا: بے شک دین آسان ہے اور جو شخص دین میں سختی اختیار کرے گا تو دین اس پر غالب آجائے گا پس  اپنے عمل میں پختگی اختیار کرو ۔اور جہاں تک ممکن ہو میانہ روی برتو  اور خوش ہو جاؤ کہ اس طرز عمل سے تم کو دارین کے فوائد حاصل ہوں گے۔ اور صبح اور دوپہراور شام اور کسی قدر رات میں عبادت سے مدد حاصل کرو۔ صحیح البخاری:

سعد نوار ،جماعت ششم ، گورنمنٹ انصاف آفٹر نون ایلیمنٹری سکول 42 ڈبلیو بی ، ضلع وہاڑی

والدین کے ساتھ  حسن سلوک

معاویہ بن حیدہ قشیری  فرماتے ہیں کہ انہوں نےحضرت محمدﷺ کی خدمت میں عرض کی کہ اے اللہ کے رسولﷺ میں کس کے ساتھ نیک سلوک اور صلہ رحمی کروں؟ آپﷺ  نے فرمایا : اپنی ماں کےساتھ۔  میں نے عرض کیا ،پھر کس کے ساتھ؟ فرمایا: اپنی ماں کے ساتھ۔  میں نے عرض کیا، پھر کس کے ساتھ؟ فرما یا: اپنی ماں کے ساتھ۔  میں نے عرض کیا پھر کس کے ساتھ؟ فرما یا: اپنے باپ کے ساتھ، پھر رشتہ داروں کے ساتھ ،  پھر سب سے زیادہ قریبی رشتہ داروں کے ساتھ،  پھر اس کے بعد درجہ بدرجہ۔

مریم صغیر ، جماعت دہم ، گورنمنٹ گرلز ہائی سکول 5 کسی ، کبیروالا، ضلع خانیوال

طارق بن زیاد

افریقہ  سے  تعلق  رکھنے والے مشہور اسلامی جرنیل طارق بن زیاد کو جب ہسپانیہ فتح کرنے کا حکم دیا گیا تو انہوں نے اپنے سپاہیوں سمیت کشتیوں میں سوار ہو کر بحیرہ روم عبور کر لیا اور خشکی پر قدم رکھتے ہی حکم دیا کہ سب کشتیوں کو جلا دیا جائے، ان کا یہ حکم سن کر سب بہت حیران ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ میرے اس حکم میں حیرانی کی کوئی بات نہیں ، ہمارا وطن یہاں سے  بہت دور ہے، اب یورپ ہی ہمارا وطن ہے، کیا تمہیں معلوم نہیں کہ ہر ملک  خدا کا ہے،   اس لیے ہر ملک ہمارا ملک ہے ، ہم ہسپانیہ کو فتح کریں گے۔  طارق بن زیاد اپنے ارادوں میں چٹان کی طرح مضبوط تھے، انہوں نے ہسپانیہ پر آٹھ سال تک حکومت کی تھی۔

بلاول حسن، جماعت ہشتم ، گورنمنٹ ایلیمنٹری سکول چک نمبر 49 فتح، ضلع بہاولنگر

کیا آپ جانتے ہیں؟

٭ چاند کی روشنی 1.3 سیکنڈ میں زمین پر پہنچتی ہے۔

٭ سورج کی روشنی 8 منٹ اور 19 سیکنڈ میں زمین پر پہنچتی ہے۔

٭ ڈولفن کی سوتے وقت ایک آنکھ کھلی ہوتی ہے۔

٭ کچھوا ، مکھی اور سانپ بہرے ہوتے ہیں۔

٭ وہیل مچھلی کی عمر پانچ سو سال سے بھی زیادہ ہوتی ہے۔

٭ ایک لال بیگ کا سر کاٹ دیا جائے تو 9دن تک وہ بغیر سر کے زندہ رہ سکتا ہے۔

٭ دیوار چین کی لمبائی 80 14 میل اور اونچائی 20 فٹ ہے۔

٭ زرافہ ایسا جانور ہے جو کبھی آواز نہیں نکالتا۔

محمد اسماعیل، جماعت دہم ، گورنمنٹ ہائی سکول 253 ڈبلیو بی، ضلع لودھراں

بھڑ: ماحول دوست کیڑا

  بھڑ کو  ایک خطرناک کیڑا سمجھا جاتا ہے لیکن یہ ماحول کی بہتری کے لیے بہت کام کرتا ہے۔ یہ مچھر اور کئی انسان دشمن کیڑےکھا کر ہماری مدد کرتی ہے۔ اس کی بے شمار اقسام اور ہر قسم کی الگ خوبیاں ہیں۔ بھڑ سرد علاقوں کے علاوہ دنیا میں ہر جگہ پائی جاتی ہے۔ اس کی اب تک 7500 کے قریب اقسام دریافت کی جا چکی ہیں۔ اس کے جسم کے تین بنیادی حصے ہوتے ہیں۔ یہ ایک منٹ میں 1100 مرتبہ اپنے پر اوپر نیچے کرتی ہے اور 30 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے اڑ سکتی ہے۔ خوراک کی تلاش میں بھڑ 400 کلومیٹر دور تک چلی جاتی ہے۔ دنیا میں موجود انجیر کے 800 سے زائد اقسام کے درختوں کے بیج ایک سے دوسری جگہ منتقل کرتی ہے۔ فیزفلائی دنیا کی سب سے چھوٹی 1ملی لیٹر لمبی بھڑ ہے۔  یہ اکیلی رہتی ہے۔

ایمن رمضان، جماعت ششم، گورنمنٹ گرلز ہائی سکول سمرا نشیب شمالی لیہ

الفاظ کی دنیا

 الفاظ کی اپنی ہی ایک دنیا ہوتی ہے۔ہر لفظ  اپنی ذمہ داری نبھاتا ہے۔کچھ لفظ حکومت کرتے ہیں اور کچھ غلامی،  کچھ لفظ حفاظت  کرتے ہیں اور کچھ وار۔ ہر لفظ کا اپنا ایک مکمل وجود ہوتا ہے۔جب سے میں نے لفظوں کو پڑھنے کے ساتھ ساتھ سمجھنا شروع کیا تو سمجھ آیاکہ لفظ صرف معنی نہیں رکھتے، یہ تو دانت رکھتے ہیں جو کاٹ لیتے ہیں، ہاتھ رکھتے ہیں  جوگریبان  کو پھاڑ دیتے ہیں۔انہیں ادا کرنے سے پہلے سوچ لیجیےکہ یہ کسی کے وجودکو سمیٹیں گے  یا کرچی کرچی بکھیر دیں گے۔ کیونکہ  یہ تمہاری ادائیگی کے غلام ہیں اور تم  ان کے بادشاہ۔اوربادشاہ اپنی رعایا کا ذمہ دار ہوتا ہےاور اپنے سے بڑے بادشاہ کو جواب دہ بھی۔

نور جاوید، جماعت ششم ، گورنمنٹ گرلزہا ئی سکول بوسن اْتار ،ملتان صدر

پاکستان کے اہم زرعی مسائل

پاکستان زرعی خطہ ہونے کے باوجود بھی مختلف مسائل کا شکار ہے، جودرج ذیل ہیں۔

٭ زرعی شعبے کے کسان مالی مشکلات کا شکار ہیں، نہ ان کے پاس جدید طریقے  ہیں نہ ان کے پاس بہتر منصوبہ بندی ہے۔

٭ ملک میں ہر سال سیلاب  آنے کی وجہ سے کسانوں کی فصل کو شدید نقصان پہنچتا ہے۔

٭ اکثر علاقہ  سیم و تھور کی وجہ سے ناقابل کاشت ہے ۔

٭ بیماریوں کی وجہ سے 25 فیصد تک فصلوں کی پیداوارکم  ہوجاتی ہے۔

٭ نہری نظام ہونے کے باوجود آب پاشی کے ذرائع ناکافی ہیں۔

٭ ہمارے ملک میں فصلوں کے لیے نئے  بیج اور کیمیائی کھاد استعمال کرنے کا رواج کم ہے جس کی وجہ سے فصل کی پیداوار کم ہوتی ہے۔

محمد سجاد، جماعت ششم ،گورنمنٹ بوائز ہائی سکول چڑھوئے والا ، ڈیرہ غازی خان
شیئر کریں
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •